ساہیوال فوڈ سیفٹی میں جدید طریقے انکے مقابل چیلنجز عنوان سےٹریننگ ورکشاپ منعقد

ساہیوال فوڈ سیفٹی میں جدید طریقے انکے مقابل چیلنجز عنوان سےٹریننگ ورکشاپ منعقد

(ساہیوال ) جی سی ٹی ساہیوال میں 20اکتوبر کو ڈیپارٹمنٹ آف فوڈ ٹیکنالوجی جی سی ٹی ساہیوال کے ساتھ مل کر *نیشنل فوڈ سیلوشنز* نے ایک روزہ ٹریننگ ورکشاپ ; فوڈ سیفٹی میں جدید طریقے انکے مقابل چیلنجز ; کے عنوان سے منعقد کرائی ۔
ورکشاپ سے نیشنل فوڈ سیلوشنزکے فورم سے ڈاکٹر رائے محمد عامر اسسٹنٹ پروفیسر انسٹیٹیوٹ آف فوڈ اینڈ نیوٹریشنل سائنسز پیر مہر علی شاہ ایرڈ ایگریکلچر یونیورسٹی راولپنڈی ، ڈاکٹر رضوان طارق ڈاکٹر محمد اجمل ،ڈاکٹر طارق محمود ، ڈاکٹر محمد ندیم اور فہد شفقت نے خطاب کیا ورکشاپ کے شرکا سے فو ڈ ما ہرین نےگفتگو کرتے ہوئے کہا کہ دینا میں خوراک کی کمی کا مسئلہ بہت تیزی کے ساتھ بڑھ رہا ہے اگر اس مسئلے پر ابھی قابو نہ پایا گیا تو وہ دن دور نہیں جب دینا میں جنگیں خوراک کے حصول کے لیے ہونگی ۔ مزید انہوں نے کہا کہ دنیا کہ تمام زرعی ممالک اپنی ضرورت سے زیادہ اجناس پیدا کر رہے ہیں ۔ اصل مسئلہ وسائل یا اجناس کی کمی نہیں بلکہ ذخیرہ شدہ اور خام مال سے مزید خوراک بنانے کے عمل میں خوراک کا ضائع ہوجانا ہے ۔ پھل سبزیوں کی نامناسب کا شت ،تحفظ اور قابل استعمال لانے کے مراحل میں تقریباً %40خوراک ضائع ہو جاتی ہے جو کہ ملک پاکستان کی آدھی آبادی کی غذائی ضرورت کو پورا کرنے کے لیے کافی ہے ۔ مقررین نے مزید کہا کہ ہمارے کسان بھائیوں کو ان فصلوں کو اگانے پر زور دینا چاہیے جو ہماری روز مرہ کی ضرورت ہے ہمیں بھیڑ چال چھوڑ کر جدید طریقوں کو اپنانا ہوگا ہمیں چاہئیں کہ جتنا ہو سکے پراسیسنگ کے مراحل سے گزری ہوئی خوراک کو محفوظ بنائے کیونکہ پراسیس فوڈ پہ نا صرف مالی بلکہ انسانی محنت و مشقت بھی ہو چکی ہوتی ہے ۔ ورکشاپ میں محققین اور طلبا کی بڑی تعداد نے شرکت کی اور ملک میں دن بدن بڑھتی ہوئی خوراک کی کمی کو پورا کرنے میں اپنا کردار ادا کرنے کا عظم کیا.

Be the first to comment on "ساہیوال فوڈ سیفٹی میں جدید طریقے انکے مقابل چیلنجز عنوان سےٹریننگ ورکشاپ منعقد"

Leave a comment

Your email address will not be published.


*