اشک قلم /حافظ زاہد مقبول

وزیر اعظم پاکستان کا دیگر ممالک کے دورے پر پاکستان کا قومی لباس شلوارقمیض پہن کر جانا اور اس پر احساس محرومی کا شکار بھی نا ہونا ہمارے لیے فخر،خوشی کی بات ہے. یقینا قوم کا لیڈر اگر کوئی کام کرتا ہے تو قوم کی عکاسی ہی سمجھا جاتا ہے اور خاص طور پرجب وہ دوسرے ممالک کے دورے پر ہو.
محترم وزیراعظم سے درخواست جس طرح قومی لباس کوعزت دی گئی ہے اسی طرح قومی زبان اردو کو بھی عزت سے نوازاجائے بیرون ممالک دوروں میں خطابات اردو زبان میں کیے جائیں شاہ محمود قریشی صاحب نے اس روایت کوزندہ کرنے کی ہمت کی ہے ان کو قوم کی طرف سے سلام محبت پیش کیا گیا اگر اس روایت کو برقرار رکھاجائے تو قومی زبان کی عزت تکریم میں اضافہ ہوگا اوروطن عزیز پاکستان کے تمام سرکاری وپرائیویٹ اداروں میں خط کتابت اور تمام امور اردو میں لازمی کیے جائیں اورتعلیمی نصاب میں انگلش کی بجائے اردو ہی لازمی مضمون ہو انگلش اختیاری مضمون قرار دیاجائے…

اشک قلم /حافظ زاہد مقبول

Be the first to comment on "اشک قلم /حافظ زاہد مقبول"

Leave a comment

Your email address will not be published.


*